نوجوان فلم میکرز کو سینئرز سے رہنمائی لینی چاہیے،اداکارہ میرا

آج کل تو فلمیں تو بنائی جارہی ہیں لیکن ان میں ڈرامے کا رنگ نمایاں ہے, یادگار کرداروں کی بدولت آج بھی مجھے دنیابھر میں جانا اور پسند کیا جاتا ہے

لاہور(اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین۔ 12 فروری2018ء) فلم اسٹار میرا نے کہا ہے کہ فلمیں تو بنائی جارہی ہیں لیکن ان میں ڈرامے کا رنگ نمایاں ہے۔ ایک اچھی فلم کیلئے پیسہ بہت ضروری ہے لیکن صرف پیسے کے بل پرہی ایک اچھی فلم بنے گی ، اس کی کوئی گارنٹی نہیں دے سکتا۔اپنے ایک انٹرویو میں اداکارہ میرا نے کہا کہ فلم کی کامیابی کیلیے صرف کہانی ہی نہیں بلکہ میوزک، ڈائیلاگ، کاسٹنگ، لوکیشن اورتکنیک کا انتخاب بھی بے حدضروری ہوتا ہے۔

جب تک نوجوان فلم میکرز ان تمام چیزوں پرتوجہ نہیں دیتے ، تب تک فلم کی بہتری اورکامیابی خواب تودیکھے جاسکتے ہیں لیکن عملی طور پر نتائج کا آنا ممکن نہیں ہے۔

اداکارہ نے کہا کہ میں نے اپنے فنی سفرکے دوران بہت سا کام کیا اورایسے یادگارکردارنبھائے جن کی بدولت آج بھی مجھے پوری دنیا میں جانا اورپسند کیا جاتا ہے۔ میں سمجھتی ہوںکہ ایک فنکار کیلیے یہ سب سے اہم بات ہوتی ہے کہ اس کے کام کوسراہا جائے۔

اس لیے ضروری ہے کہ موجودہ دورمیں بننے والی فلموں کے انداز کوکچھ تبدیل کیا جائے۔میرا کا کہنا تھا کہ فلمیں توبنائی جارہی ہیں لیکن ان میں ڈرامے کا رنگ نمایاں ہے۔ اب پیسے خرچ کرکے کوئی بڑی اسکرین پربھلا ڈرامہ کیوں دیکھی یہی وہ بات ہے جس کونوجوان فلم میکرتاحال سمجھ نہیں پائے۔ ان کا تعلق ٹی وی سے ضرور ہے لیکن انھیں سلوراسکرین کے مزاج کوسمجھنے اوراس کے کام کوسیکھنے کی ضرورت ہے۔اداکارہ نے کہا کہ اگر سینئر فلم میکرز سے رہنمائی حاصل کرلی جائے توکسی کی توہین نہیں ہوگی کیونکہ سیکھنے کا عمل توتمام عمر جاری رہنا چاہیے۔ جو لوگ ایسا سمجھتے ہیں کہ وہ مکمل ہیں اورانھیں کسی کی رہنمائی کی ضرورت نہیں تووہ ہمیشہ نقصان میں جاتے ہیں۔

گوگل + وٹس ایپ پر شئیر کریں